“دوسروں کو نصیحت خود میاں فصحیت” عمران خان پر الزامات ن لیگ کا خود توشہ خانہ کی تفصیلات بتانے سے انکار

اسلام آباد(ویب ڈیسک) سابق وزیراعظم عمران خان پر الزامات لگانے والی ن لیگ نے توشہ خانہ کی تفصیلات بتانے سے انکار کردیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق سلیمان نیازی ایڈووکیٹ نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے کیبنٹ ڈویژن کو توشہ خانے کی تفصیل فراہم کرنے کیلئے خط لکھا ہے،

تاہم کیبنٹ ڈویژن نے معلومات فراہم کرنے سے انکار کردیا ہے۔ سلمان نیازی ایڈووکیٹ کا کہنا ہے کہ انہوں نے کیبنٹ ڈویژن کو خط لکھ کر 1947 سے اب تک وزرائے اعظم، صدور کو ملنے والے تحائف کی تفصیلات فراہم کرنے کا مطالبہ کیا تھا، خط میں وزرائے اعظم اور صدور کو ملنے والے تحائف کی مارکیٹ ویلیو بھی مانگی گئی تھی۔ خط میں ان کا کہنا تھا کہ بتایا جائے وزرائے اعظم اور صدور نے توشہ خانے کے تحفے پر کیا ادائیگی کی۔ سلمان نیازی کا کہنا ہے کہ کیبنٹ ڈویژن نے توشہ خانے کی تفصیلات بتانے سے انکار کردیا ہے، کیبنٹ ڈویژن نے انہیں جواب دیا ہے کہ توشہ خانہ کی تفصیلات کلاسیفائیڈ ہے، فراہم نہیں کرسکتے۔دوسری طرف وزیراعظم شہباز شریف نے پی ٹی آئی چیئرمین اور سابق وزیراعظم عمران خان کے امریکی دھمکی کے موقف کو تسلیم کرلیا ہے۔ وزیراعظم شہباز شریف نے قومی اسمبلی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا میں اسمبلی میں پوری ذمے داری سے بات کررہا ہوں کہ پاکستانی سفیرنے کہا کہ میں نے خط میں دھمکی آمیز گفتگو کا بتایا۔ شہباز شریف نے یہ بھی کہا کہ پاکستانی سفیرنے بتایا کہ مجھ سے جو بات چیت ہوئی وہ دھمکی آمیز تھی، لیکن اس میں سازش یا غداری کا عنصر کہاں سے آگیا؟ وزیراعظم نے قومی اسمبلی سے اپنے خطاب میں مزید کہا کہ یکم مئی کے بعد لوڈشیڈنگ میں کمی ہوئی ہے آئندہ بجلی کی لوڈ شیڈنگ میں مزید کمی دیکھنے میں آئے گی اس سلسلے میں متعلقہ افسران اور عمران خان کو بھی مدعو کروں گا۔ شہباز شریف کا کہنا تھا کہ میں 2018 میں جو قرضہ تھا سابقہ حکومت نے اس میں 85 فیصد اضافہ کیا، ایک بھی اینٹ نور عالم خان کے حلقے اور نہ کہیں پاکستان میں نظر آئے گی، گزشتہ حکومت نے قرضےلے کر آنے والی نسلوں کو مقروض کردیا۔ وزیراعظم نے کہا کہ عمران خان نے جو کل مثال دی اس سے زیادہ قبیح حرکت نہیں ہوسکتی،

Leave a Reply

Your email address will not be published.