جنرل باجوہ کس سے’ نئے آرمی چیف‘ کی تعیناتی چاہتے ہیں؟ سینئر اینکر پرسن کاشف عباسی کا ناقابلِ یقین انکشاف

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )نجی ٹی وی پروگرام میں سینئرصحافی طلعت حسین نے سینئر اینکر پرسن و تجزیہ کار کاشف عباسی سے سوال پوچھا کہ کیا جنرل قمر باجوہ یہ چاہیں گے کہ نئے آرمی چیف کی تعیناتی شہباز شریف کریں ، یا عمران خان کریں ، یا پھر وہ چاہیں گے کہ نگران حکومت نئے آرمی چیف کی تعیناتی کرے؟

۔اس کے جواب میں کاشف عباسی کا کہنا تھا کہ میراخیال ہے کہ دو جگہوں سے انہیں کوئی پریشان نہیں ہونی چاہیے اگر وہ دونوں کسی کو تعینات کریں ،نکو میرا خیال پریشانی عمران خان سے زیادہ ہو اگر وہ نیا آرمی چیف تعینات کریں تو کیا ہو گا ، میرا اپنا یہ خیا ل ہے شہباز شریف انسٹیٹیویشن کیساتھ لارجری ایگری کر لیں گے ۔اس معاملے میں ٹرسٹ کا بہت اہم کردار ہے ۔ انکا کہنا تھا کہ نیا آرمی چیف کسی نگران حکومت کو نہیں لگانا چاہیے ،کیونکہ پولیٹکل حکومت نے اگلے آرمی چیف کیساتھ کام کرنا ہےکیونکہ انسٹیویشن کا ہیڈ ہی انسٹیویشن کا ہیڈ ہوتا ہے ۔یہاں پر یہ امر بھی قابلِ ذکر ہے کہ پاکستان تحریک انصاف کے رہنما فیصل واوڈا نے پٹرول اور ڈالر کی قیمتیں مزید بڑھنے کی پیشگوئی کرتے ہوئے کہاہے کہ بہت جلد پٹرول 200 اور ڈالر 225 سے اوپر ہوگا۔اپنے بیان میں فیصل واوڈا نے کہا کہ اب پتا چلا ان کرداروں کو امپورٹڈ حکومت صرف کرپشن کرنا جانتی ہے، ڈیڑھ ماہ میں ملک کا بھٹہ بٹھا دیا گیا۔پی ٹی آئی رہنما نے کہا کہ ریکارڈ کا حصہ بنالیں بہت جلد ایک لٹر پٹرول 200 روپے سے زائدہوگا، ریکارڈ کا حصہ بنالیں بہت جلد ڈالر 225 روپے سے اوپر ہوگا۔فیصل واوڈا نے کہا کہ امپورٹڈ نے معاشی تباہی پھیر دی، اس ظلم و بربریت کا قوم کو کون حساب دے گا۔دوسری جانب سینٹ میں تحریک انصاف کے اراکین نے کہاہے کہ حکمران اپنے آپ کو این آر دے رہے ہیں ،اوورسیز پاکستانی کو ووٹ کو محروم کرنے کی کوشش کررہے ہیں،لانگ مارچ میں پولیس کی جانب سے دہشت گردی ہوئی،لوگوں پر بدترین شیلنگ کی گئی،عمران نے فیصلہ کیا تھا چار مہینوں میں پیٹرول اور

بجلی مہنگا نہیں کرنا تھا،ہر گزرتا دن عوام کے لیے نقصان بڑھتا جائے گا،جلد سے جلد الیکشن کرایا جائے۔اپوزیشن لیڈر ڈاکٹر وسیم شہزاد نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ ہم ایک بات کرتے آرہے ہیں،ان کا اولین مقاصد ہے اپنے آپ کو این آر او دینا،اوورسیز پاکستانی کو ووٹ کو محروم کرنے کی کوشش کررہے ہیں،یہ نیب میں اپنے سہولت کار خود بن رہے ہیں،پیٹرول میں تیس روپے کی بڑھا دی گئی ہے۔ سینیٹر شبلی فراز نے کہاکہ لانگ مارچ میں پولیس کی جانب سے دہشت گردی ہوئی،لوگوں پر بدترین شیلنگ کی گئی،یہ نیب میں تبدیلیاں کررہے ہیں،یہ اپنے کیسز ختم کرنے کی بھرپور کوشش کررہے ہیں ،اوورسیز ووٹنگ کو ختم کررہے ہیں،عمران خان اس ملک میں احتساب چاہتے تھے۔ انہوںنے کہاکہ اوورسیز کا ووٹنگ چھیننا ،انصاف کا جنازہ نکل رہا ہے۔شوکت ترین نے کہاکہ دو سالوں میں بہت زیادہ ترقی ہوئی ہے،ریکارڈ پاکستان میں ایکسپورٹ ہوا تھا،عمران نے فیصلہ کیا تھا چار مہینوں میں پیٹرول اور بجلی مہنگا نہیں کرنا تھا،ہم روس سے سستی پیٹرول خرید رہے تھے،ان لوگوں نے ایک مرتبہ میں پیٹرول تیس روپے مہنگا کردیا۔ انہوںنے کہاکہ کہاں ہے مفتاح اسماعیل جو کہتا تھا 70 روپے پیٹرول ہونا چاہیے ،ان لوگوں نے پچھلے دونوں سے کوئی میٹنگ نہیں کی۔پی ٹی آئی رہنما علی ظفر نے کہاکہ الیکٹرونک ریفارم بل کے ساتھ زیادتی کی ہے۔ یہ جو مرضی کر لیں انہوں نے عالمی مالیاتی ادارے کے سامنے گھٹنے ٹیک دیئے ہیں اور حالات دن بہ دن مزید خرابی کی جانب جائیں گے، کیونکہ ان سے معاملات کنٹرول ہی نہیں ہونے والے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.