”سوال چنا جواب گندم“ پی پی رہنما کی روس سے سستا تیل خریدنے کیلیے انوکھی منطق

لاہور: (ویب ڈیسک) ”سوال چنا جواب گندم“ روس سے سستا تیل خریدنے کے سوال پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما سلیم مانڈوی والا نے انوکھی منطق پیش کر دی۔ نجی ٹی وی کے پروگرام کے اینکر پرسن نے سوال کیا کہ روس کی ایمبسی کا بیان آیا کہ پاکستان چاہے تو وہ روس سے سستا تیل لے سکتا ہے۔

جواب میں سلیم مانڈوی والا نے کہا کہ خط تو ان کے پاس پڑا ہے لیکن ابھی تک تو جواب نہیں آیا، خط لکھنے سے کچھ نہیں ہوتا اس کے لیے روس میں جا کر بیٹھنا پڑتا ہے۔ رہنما پیپلز پارٹی نے کہا کہ عمران خان نے 4 ماہ تک چیزوں کی قیمتوں کو روک کر رکھا، عمران خان معیشت پر سیاست کر رہے تھے، عمران خان بھی روس سے تیل لے رہے تھے لیکن کیا انہوں نے لیا ؟ سلیم مانڈوی والا نے کہا کہ لیٹر لینے سے کام نہیں بنتا، وہاں جا کر بات کرنا پڑتی ہے، روس کی جانب سے لیٹر پر کوئی جواب نہیں آیا۔ دوسری جانب سابق وزیر خزانہ شوکت ترین کا کہنا ہے کہ ہماری گزشتہ 2 سال کی کارکردگی 30 سال میں سب سے بہتر ہے، انہوں نے وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ لوگوں کو دھوکا دینا بند کرو۔تفصیلات کے مطابق سابق وزیر خزانہ شوکت ترین نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے ٹویٹ میں کہا کہ سنہ 2020 کرونا وائرس کی وبا کے باوجود ملکی ترقی کی شرح منفی 0.94 فیصد تھی۔شوکت ترین کا کہنا تھا کہ اس وقت پوری دنیا میں ترقی کی شرح منفی 5 سے 6 فیصد تھی۔ انہوں نے کہا کہ مفتاح اسماعیل کس سے مذاق کر رہے ہیں، ہماری گزشتہ 2 سال کی کارکردگی 30 سال میں سب سے بہتر ہے، لوگوں کو دھوکا دینا بند کریں وہ سچ جانتے ہیں۔ سابق وزیر کا مزید کہنا تھا کہ گزشتہ 8 ہفتےمیں حکومت کی کارکردگی قابل رحم ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.