یہ خبر پڑھ کر اپنی رائے ضرور دیں

کراچی (ویب ڈیسک) اپوزیشن رہنماؤں نے بجٹ کو مسترد کرتے ہوئے تنخواہوں میں 30فیصد اضافے کا مطالبہ کردیا ہے، ان کا کہنا ہے کہ مزدور کی کم ازکم اجرت 30ہزار روپے مقرر کی جائے، اپوزیشن اس بجٹ کو بے نقاب کرے گی ، حکومت ناکام ہوچکی ہے، ان خیالات کا اظہار جماعت اسلامی کے امیر سراج الحق،

عوامی نیشنل پارٹی کے صدر اسفندیار ولی خان ،پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما شاہد خاقان عباسی ،صوبائی وزیر بلدیات سندھ ناصر حسین شاہ ، جمعیت علماء اسلام (ف) کے رہنما مولانا غفور حیدری اور قومی وطن پارٹی کے صوبائی چیئرمین سکندر حیات خان شیرپائو نے اپنے علیحدہ علیحدہ بیان میں کیا ۔ امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے کہا ہے کہ وفاقی بجٹ میں سے 3ہزار 60ارب روپے سود اور قرضوں کی ادائیگی میں چلے جائیں گے، بیرونی قرضوں کے پہاڑ نے قوم کی کمر توڑ دی، مزدور کی کم از کم اجرت 30ہزار مقرر کی جائے،وزیرخزانہ کا پیش کردہ بجٹ پی ٹی آئی کے منشور اور وعدوں کی تکمیل پر بالکل خاموش ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.