رانا ثنااللہ نے حکمران جماعت سے اہم سوال پوچھ لیا ،

اسلام آباد (ویب ڈیسک)مسلم لیگ (ن) پنجاب کے صدر اور رکن قومی اسمبلی رانا ثناءاللہ نے کہا ہے کہ سابق وزیر اعظم نواز شریف قید خانے کی دیوار توڑ کر نہیں گئے، حکومت نے خود انہیں باہر بھیجا ہے، اس وقت انصاف کی توقع صرف جہانگیر ترین، زلفی بخاری اور عامر کیانی کو ہی ہوسکتی ہے،

اگر سلمان شہباز کو انصاف ملے گا تو وہ یہاں آکر حقائق سامنے رکھ دیں گے۔نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے رانا ثنا ءاللہ نے کہا کہ میں نے جس مقدمے میں 6 ماہ قید میں گزارے کوئی بتاسکتا ہے وہ مقدمہ کیا تھا؟، یہ ایوانوں پر مسلط ہوکر ملک کو لوٹ رہے ہیں۔ن لیگی رہنما نے کہا کہ نواز شریف قید خانہ توڑکر نہیں گئے حکومت نے باہر بھیجا ہے، سابق وزیر اعظم نیب کی تحویل میں تھے تو ان کی صحت خراب ہوئی، ان کے ہسپتال اور ڈاکٹر نے نواز شریف کے ٹیسٹ کیے، جس پر کابینہ نے نواز شریف کو بیرون ملک جانےکی اجازت دی۔رانا ثنا اللّٰہ نے کہا کہ ہمارےساتھ ناانصافی ہوئی اور اب بھی ظلم ہورہا ہے جبکہ چار سال سے فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ نہیں ہورہا۔انہوں نے کہا کہ جہانگیر ترین کی انہی ٹرانزیکشن کو یہ منی لانڈرنگ بنا رہے تھے، کاروباری ٹرانزیکشن کو الجھایا جارہا ہے۔ن لیگی رہنما نے کہا کہ شریف فیملی کا بزنس سلمان شہباز دیکھ رہے تھے، اگر سلمان شہباز کو انصاف ملے گا تو وہ یہاں آکر حقائق سامنے رکھ دیں گے، شہباز شریف اس امید پر ہیں کہ شاید میرے ساتھ انصاف ہوگا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.