ناقابل یقین تفصیلات سامنے آگئیں

لاہور ( ویب ڈیسک ) وزیر اعظم عمران خان کو ریورس سوئنگ سکھانے والے پاکستانی کرکٹ ٹیم کے لیجنڈ باؤلر سرفراز نواز آج کسمپرسی کی زندگی گزارنے پر مجبور ہیں ،سرفراز نواز نے 1979 میں میلبورن کے میدان میں صرف ایک رنز کے عوض 7آسٹریلین کھلاڑیوں کو آؤٹ کر کے ریکارڈ قائم کیا تھا۔

حال ہی میں منظر عام پر آنے والی ایک ویڈیو نے ان کے حالات زندگی سے پردہ اٹھایا جس نے اس عظیم کھلاڑی کے چاہنے والوں کو آبدیدہ کر دیا۔صحافی ڈاکٹر نوید الٰہی کے مطابق کسی شخص نے لندن کے ویکسی نیشن سینٹر میں سرفراز نواز کی ویڈیو بنائی جس میں وہ چھڑی کے سہارے چل رہے ہیں ۔ اپنے ایک ویڈیو پیغام میں سرفراز نواز نے کہا کہ ایک زندگی پاکستان کرکٹ بورڈ کی خدمت کرتے گزاری مگر بدعنوانی کو بے نقاب کرنے پر پاکستان کرکٹ بورڈ نے آج میری پنشن روکی ہوئی ہے ۔ مجھے سٹنٹ ڈلے ہیں جبکہ میں شوگر کا مریض بھی ہوں ، ان حالات میں میری مدد کرنے کی بجائے یہ لوگ میرے دشمن بنے ہوئے ہیں ۔سرفراز نواز نے کہا کہ میں نے پاکستان کرکٹ بورڈ میں جوئے اوربدعنوانی کی نشاندہی کی تھی ، میری نشاندہی کرنے پر وہاں کچھ با اثر افراد کو معطل بھی کیا گیا تھا مگر اس کے بعد میری پنشن روک دی گئی جس پر میں نے اسلام آباد ہائیکورٹ سے رجوع کیا ، احسان مانی نے مجھ سے وعدہ کیا تھا کہ وہ میرے معاملے کو میرٹ پر دیکھیں گے ۔ احسان مانی نے تیسرے شخص کے ذریعے مجھے پیغام بھجوایا کہ ہم آؤٹ آف کورٹ معاملہ ڈیل کر لیتے ہیں جس پر میں نے انہیں خط لکھا کہ میں آؤٹ آف کورٹ معاملہ سیٹل کرنے کو تیار ہوں ، مگر اب احسان مانی کے وکیل کی جانب سے خط آیا ہے کہ آپ پہلے معافی مانگیں ، عدالت سے اپنا کیس واپس لیں پھر آپ کے معاملے کو دیکھتے ہیں ۔سرفراز نواز نے کہا کہ میں نے اپنے وکیل سے مشاورت کی جس پر میرے وکیل نعیم بخاری نے مجھے منع کر دیا کہ کیس واپس لینے کے بعد اگر یہ لوگ مکر گئے تو ہمارے پاس کوئی پلیٹ فارم نہ بچے گا۔ سرفراز کا کہنا ہے کہ میں معافی کس بات پر مانگوں ، میں نے اپنے بورڈ میں بدعنوانی اور جوئے کی نشاندہی ثبوتوں کیساتھ دی ، پھر کہا جا رہا ہے کہ کیس واپس لینے کے بعد میری پنشن بحال کرنے کی یقین دہانی بھی نہیں کرائی جا رہی ، بلکہ کہا گیا ہے کہ آپ کیس واپس لیں پھر سوچیں گے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.