ایک بار راکھی ساونت کو انکی والدہ نے یہ طعنہ کیوں دیا تھا ؟

ممبئی (ویب ڈیسک) بھارتی متنازع اداکارہ راکھی ساونت نے انکشاف کیا ہے کہ ایک بار ان کی والدہ نے کہا تھا ’کاش تو پیدا ہوتے ہی اس دنیا سے چلی جاتی تو اچھا تھا‘۔بھارتی میڈیا رپورٹ کے مطابق راکھی ساونت نے ایک انٹرویو میں اپنی زندگی کے تلخ واقعات سے پردہ اٹھایا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ جب میکا سنگھ کا تنازع سامنا آیا تو میری والد نے مجھ سے کہا کہ کاش تو پیدا ہوتے وقت ہی چل بستی تو اچھا تھا۔بالی ووڈ اداکارہ نے کہا کہ میں فلم انڈسٹری میں آنے کےلیے اپنی فیملی کو چھوڑ دیا تھا، فیملی میں میرے لیے سب کچھ بدل گیا تھا۔اُن کا کہنا تھا کہ فلم انڈسٹری میں متعدد تنازعات میں الجھنے، خاص طور پر میکا سنگھ تنازع پر والدہ نے میری موت کی خواہش کی تھی۔راکھی ساونت نے کہا کہ چچا سمیت میری فیملی نے مجھے برے کردار کی قرار دے کر رابطہ ختم کرلیا تھا، وہ مجھ سے میری ماں سے بات تک نہیں کرتے تھے، یہاں تک کہ انہوں نے والد کے جنازے پر بھی نہیں بلایا۔انہوں نے کہا کہ میری فیملی بالیکا ودھو جیسی ہے، اس لیے میرے پاس فلم انڈسٹری میں آنے کے لیے گھر سے بھاگنے کے سوا کوئی آپشن نہیں تھا۔راکھی ساونت نے اپنے فیصلے کی تعریف کی، اس پر خدا کا شکر ادا کیا اور کہا کہ آج میرے والد مجھ پر فخر کرتے ہوں گے کیونکہ میں آج وہی بن چکی ہوں جو بننا چاہتی تھی۔انہوں نے انکشاف کیا کہ میرے اس فیصلے کے باعث آج تک خاندان مجھے قبول کرنے کو تیار نہیں، کوئی بھی میری ماں سے بات نہیں کرتا، ان کا خیال ہے کہ اگر ہم سے تعلق رکھا تو جیسے میں بھاگ گئی تھی ان کی بیٹیاں بھی گھر سے بھاگ جائیں گی۔راکھی ساونت نے بتایا کہ میری والدہ جو آج کل میرے بہت ہی قریب ہیں، ایک وقت میں وہ میرے طرز زندگی سے مایوس ہوگئی تھیں۔انہوں نے کہا کہ لوگ ہمیشہ کہتے ہیں میں توجہ کی طالب ہوں، جب انہیں پتا ہونا چاہیے کہ ایسا نہیں ہے، میڈیا مجھ سے پیار کرتا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.