مارکیٹیں و بازار رات 8 بجے بند کرنے کا حکم جاری کردیا گیا

اسلام آباد(ویب ڈیسک) حکومت نے کورونا کی چوتھی لہر پر قابو پانے کیلئے اہم فیصلے کرتے ہوئے مارکیٹوں کے اوقات کار رات 10 سے کم کرکے 8 بجے تک کر دئیے ہیں جبکہ مارکیٹیں ہفتے میں دو دن بند رہیں گی۔یہ اہم فیصلہ وزیراعظم عمران خان کے زیر صدارت اجلاس میں کیا گیا۔ اجلاس کے بعد

میڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے انسداد کورونا کے قومی ادارے این سی او سی کے سربراہ اسد عمر کا کہنا تھا وزیراعظم کی منظوری کے بعد کچھ فیصلے کیے ہیں۔ بندشوں سے کمزور طبقہ بہت متاثر ہوتا ہے۔ ہم نے دیہاڑی دار طبقے کا بھی خیال رکھنا ہے۔ کورونا کی تین لہروں میں سمارٹ لاک ڈاؤن کی پالیسی اپنائی گئی تھی، اس وقت مریضوں کی تعداد میں تیزی سے اضافہ ہوا ہے۔اسد عمر نے کہا کورونا کی صورتحال کے پیش نظر فیصلہ کیا گیا ہے کہ تمام مارکیٹیں ہفتے میں دو دن بند رہیں گی لیکن ہفتہ وار دو چھٹیوں کا فیصلہ صوبائی حکومتیں خود کریں گی۔ منگل سے رات 8 بجے سے تمام مارکیٹیں اور بازار بند کرنے کی پابندی ہوگی۔ مخصوص اضلاع میں شادی ہا بھی بند رہیں گے۔ مزار اور سیمینا ہال بھی بند رہیں گے صور تحال کو دیکھ کر مزید اقدامات اٹھانا پڑے تو اٹھائے جائیں گے۔ راولپنڈی، لاہور، فیصل آباد اور ملتان میں بندشیں لگیں گی۔ ہم نے 22 کروڑ لوگوں کی حفاظت کرنی ہے۔این سی او سی کے سربراہ نے کہا ان ڈور ڈائننگ بند کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے تاہم ٹیک آوے کی سہولت 24 گھنٹے دستیاب ہوگی۔ پبلک ٹرانسپورٹ پر مسافروں اور دفاتر میں ملازمین کی تعداد بھی 50 فیصد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے باعث سندھ کے بعد پنجاب میں سب سے زیادہ اموات ریکارڈ کی گئی ہیں۔ گزشتہ روز کورونا وائرس سے 40 اموات ہوئیں جن میں سے 19 اموات وینٹی لیٹرز پر موجود مریضوں کی تھیں۔اعدادو شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک بھر میں 4 ہزار 858 افراد کے کووڈ ٹیسٹ مثبت آئے۔ملک کے 4 بڑے شہروں میں وینٹی لیٹرز پر کووڈ۔ 19 کے مریضوں کے تناسب کے لحاظ سے سکردو میں 25 فیصد، پشاور میں 26 فیصد،لاہور 21 فیصد اور اسلام آباد میں 33 فیصد مریض ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.